Home / بزنس / جنوبی پنجاب کی فلور ملوں کو قریبی سینٹرز سے گندم کی فراہمی ےقےنی بنائی جائے، حبیب الرحمن لغاری

جنوبی پنجاب کی فلور ملوں کو قریبی سینٹرز سے گندم کی فراہمی ےقےنی بنائی جائے، حبیب الرحمن لغاری

 

 

جنوبی پنجاب کی فلور ملوں کو قریبی سینٹرز سے گندم کی فراہمی ےقےنی بنائی جائے، حبیب الرحمن لغاری
محکمہ خوراک پنجاب فلور ملز مالکان کو اعتماد میں لئے بغیر گندم کی ایلو کیشن کر رہا ہے، فلور ملز مالکان کیلئے مشکلات پیدا نہ کی جائیں
پرانی گندم فیڈ ملوں کو جبکہ نئی گندم فلور ملوں کو جاری کی جائے، تاکہ عوام الناس کو معیار اور صحت مند آٹا فراہم کےا جا سکے۔ صحافیوںسے گفتگو
لاہور ۔( )۔۔۔۔۔۔۔۔پاکستان فلور ملز ایسوسی ایشن (پنجاب) کے چےئرمین حبیب الرحمن خان لغاری نے کہا ہے کہ محکمہ خوراک پنجاب فلور ملز مالکان کو اعتماد میں لئے بغیر گندم کی ایلو کیشن کر رہا ہے ، جنوبی پنجاب کی فلور ملوں کو قریبی سینٹرز سے گندم کی فراہمی کو ےقےنی بناےا جائے ، محکمہ خوراک پنجاب 2016 ۔ 17 اور 2017۔ 18 کی گندم فلو ملوں کی بجائے فیڈ ملوں کو سبسڈائزڈ نرخوں پر فروخت کرے جبکہ انسانوں کے کھانے کیلئے 2018 ۔ 19 کی گندم فلور ملوں کو فراہم کی جائے تاکہ معیاری بہترین آٹا عوام الناس تک پہنچاےا جا سکے، فلور ملز مالکان کسی بھی صورت دو تین سال پرانی گندم عوام الناس کے استعمال کیلئے انہیں اٹھائیں گے ۔ ےہ بات انہوں نے گزشتہ روز صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہی۔ حبیب الرحمن خان لغاری نے کہا کہ محکمہ خوراک پنجاب فلور ملوں کیلئے 120 کلو میٹر ےا اس سے بھی زےادہ دوری پر گندم کی ایلو کیشن کر رہا ہے جبکہ پرائیو یٹ افراد کو سینٹرز کے قریبی سے گندم فراہم کی جا رہی ہے ، انہوں نے کہاکہ محکمہ خوراک پنجاب کا ےہ طرز عمل بالکل درست نہیں ہے ۔ بلکہ محکمہ خوراک پنجاب کو چاہےے کہ وہ جنوبی پنجاب ضلع رحیم ےار خان کی 50 سے زائد فلور ملوں کے قریب ترین سینٹرز سے گندم کے کوٹہ کی فراہمی کو یقینی بنائے ، با صورت دیگر ضلع رحیم ےار خان سے پرائیویٹ پارٹنرز / ٹریڈرز کو گندم کے اجراءکی صورت میں گندم کے سٹاکس جلد ختم ہو جائیں گے اور فلور ملوں کو اپنی ضرورت پوری کرنے کیلئے دور دراز کے علاقوں سے گندم اٹھانی پڑے گی جس پر فلور ملوں کو اضافی اخراجات برداشت کرنا پڑیں گے۔ لہذا محکمہ خوراک پنجاب سے مطالبہ کرتے یں کہ پرائیویٹ پارٹنرز اور ٹریڈرز کو ضلع رحیم ےار خان سے گندم کا اجراءفور ی طور پر بند کےا جائے تاکہ فلور ملیں اپنی روزانہ کی ضرورت کو پورا کرنے کیلئے اپنے قریبی گندم کے مراکز سے گندم اٹھا سکیں۔انہوںنے کہاکہ جام پور ضلع راجن پور میں بھی ذخیرہ کردہ گندم کی دےگر اضلاع میں ترسیل کی جا رہی ہے جبکہ جام پور میں موجود فلور ملیں باقاعدگی کے ساتھ سرکاری گندم کا کوٹہ اٹھا رہی ہیںگندم کے سٹاک کی ترسیل کی صورت میں فلور ملوں کو دور دراز علاقوں سے گندم اٹھانی پڑے گی لہذا محکمہ خوراک جام پور کی فلور ملوں کی ضرورت کو مدنظر رکھتے ہوئے فاضل گندم کے سٹاکس کی ترسیل کرے ، محکمہ خوراک پنجاب نے تحصیل جام پور ضلع راجن پور سے گندم تمام سٹاکس کی ایلوکیشن کر دی ہے اور جام پور فلور مل سے کہا جا رہا ہے کہ وہ فاضل پور ےا راجن پور سے گندم اٹھائے جو کہ 120 کلو میٹر دور ہے ےہ سراسر ذےادتی ہے اس بارے میں ڈائریکٹر فوڈ اور سیکرٹری خوراک کو بھی بذرےعہ لیٹر آگاہ کر دےا گےا ہے

Check Also

ناجائز تجاوازات کے خلاف آپریشن کرتے ہوئے قبضہ گروپوں اور ٹےکس گزاروں مےں تفرےق رکھی جائے ۔پیاف

ناجائز تجاوازات کے خلاف آپریشن کرتے ہوئے قبضہ گروپوں اور ٹےکس گزاروں مےں تفرےق رکھی ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *