Home / جرائم / سجاول کے قریب اٹھائیس سالہ نوجوان منہ میں کینسرکی وجہ سے موت وزندگی کی کشمکش میں مبتلاہوگیاہے ا

سجاول کے قریب اٹھائیس سالہ نوجوان منہ میں کینسرکی وجہ سے موت وزندگی کی کشمکش میں مبتلاہوگیاہے ا

 

سجاول:سجاول کے قریب اٹھائیس سالہ نوجوان منہ میں کینسرکی وجہ سے موت وزندگی کی کشمکش میں مبتلاہوگیاہے اور غربت کے باعث علاج کرنے سے قاصرہے،جبکہ پانچ بچے اور بیوی روزی روٹی کی تنگی کا شکارہیں، رپورٹ کے مطاق سجاول کے قریب گوٹھ سلیمان کہرائی کا اٹھائیس سالہ شادی شدہ نوجوان محمد رفیق ولد محمد یوسف کہرائی گذشتہ گیارہ ماہ سے منہ میں کینسر کی وجہ سے علاج نہ ہونے سے اب قریب المرگ ہوگیاہے، اس کے بھائی ستار کہرائی نے بتایاکہ گیارہ ماہ قبل اس کو منہ میں زخم پیدا ہوا جس کے بعد اس کا حیدرآباد سول اسپتال میں علاج کرایاگیا، اور آپریشن خراب ہوگیا، جس کے بعد زخم رسنا شروع ہوگیا، بعدازاں کراچی میں بھی علاج کرایالیکن وہاں سے مہنگے ٹیسٹ کرانے کو کہاگیارقم نہ ہونے سے گھربیٹھ گیا، اب اس کی حالت خراب ہے منہ میں زخم سے خون آرہاہے جبکہ کھاناپینابھی بندہے اور اب صرف پانی پر گذارہ ہے،شدید تکلیف میں موت اور زندگی کی کشمکش میں ہے،اس نے بتایاکہ متاثر نوجوان کی شادی ہوئی ہے اور اس کی تین بیٹیاں اور دو بیٹے ہیں جو کہ چھوٹے ہیں پہلے وہ مزدوری کرکے بچوں کو کھلاتاتھااب پوراگھرفاقہ کشی کا شکارہے انہوں نے اپیل کی کہ عنان حکومت اور اہل ثروت فوری طورپر انسانی ھمدردی کی بنیاد پر کینسر میں مبتلانوجوان کے علاج کا انتظام کریں تاکہ اس کی زندگی بچائی جاسکے اور اسکے معصوم بچے یتیم ہونے سے بچ جائیں۔

Check Also

اے ٹی ایم توڑنے کی منصوبہ بندی پر سافٹ ویئر انجینئر سمیت تین ملزم گرفتار

 کراچی: سائٹ اے پولیس نے اے ٹی ایم مشین توڑنے کی منصوبہ بندی کرنے والے تین ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *