Home / کالم / لوگو ہمراہ لف ہے ۔ وزیر اعظم اسلامی جمہوریہ پاکستان عمران خان کے قوم سے پہلے خطاب کے تناظر میں لکھا جانے

لوگو ہمراہ لف ہے ۔ وزیر اعظم اسلامی جمہوریہ پاکستان عمران خان کے قوم سے پہلے خطاب کے تناظر میں لکھا جانے

 

 

 لوگو ہمراہ لف ہے ۔ وزیر اعظم اسلامی جمہوریہ پاکستان عمران خان کے قوم سے پہلے خطاب کے تناظر میں لکھا جانے والا کالم۔

عوامی امنگوں کی ترجمانی
تحریر : ڈاکٹر شجاع اختر اعوان
نو منتخب وزیر اعظم اسلامی جمہوریہ پاکستان عمران خان کا قوم سے پہلا خطاب انتہائی متاثر کن اور محرومیوں ، پسماندگی ، غربت اور بدحالی کا شکار ، بالا دست طبقات و اشرافیہ کے مظالم کے زیر تسلط گزر بسر کرنے والے ریاستی افراد ، عام آدمی اور قوم کے تمام طبقات کے لیے روشنی کی کرن سے کم نہیں ملک کی ستر سالہ تاریخ گواہ ہے کہ وطن عزیز میں ناقص حکومتی پالیسوں کی بدولت امیر ، امیر سے امیر ترین اور غریب ، غریب سے غریب تر ہوتا چلا گیا۔ ملک کو خودانحصاری کی طرف گامزن کرنے کی بجائے غیر ملکی قرضوں پر انحصار کیا گیا ۔ ان بھاری سودی قرضوں نے ملک و قوم کو معاشی طور پرمفلوج کر کے رکھ دیا۔ ملکی آبادی کا ایک بڑا حصہ بنیادی ضروریات زندگی سے محروم ہے۔ بے روز گاری ، غربت ، افلاس اور بے گھر افراد اس معاشرے کا المیہ ہیں۔ ہر دور میں منتخب ہونے والے حکمرانوں نے سرکاری وسائل کو بے تحاشہ اپنی عیاشیوں و اقرباءپروری کے لیے استعمال کیا۔ نو منتخب وزیر اعظم نے کہہ دیاہے کہ اب ایسا نہیں چلے گا۔ وزیر اعظم عمران خان کا قوم سے خطاب ایک حاکم کے بجائے ایک لیڈر اور قائد کا خطاب تھا جو عوام کے زخموں پر مرہم رکھنے کے مترادف ہے ۔ اس خطاب میں قوم کے حقیقی مسائل کو سامنے رکھ کر بڑی باریک بینی سے ان کے حل کے لیے عزم کا اظہا ر کر کے عمران خان نے قوم کے ہر فرد کا دل جیت لیا ہے انتہائی سادہ اور عام فہم الفاظ میں کیئے جانے والا خطاب ہر مردو زن اور بچوں تک کے ذہنوں میں نقش ہو چکا ہے۔ بڑے گھروں کو تعلیمی ادارے بنانے ، تعلیم و صحت کی سرکاری سہولیات کو بہتر کرنے ، ماحولیاتی آلودگی کو کم کرنے ، موسمیاتی تبدیلیوں کے لیے اربوں درخت لگانے ، بے روزگاری کے لیے نوکریوں کا انتظام ، بے گھر افراد کو چھت فراہم کرنے ، ٹیکس کے نظام میں بہتری اور زیادہ سے زیادہ افراد کو ٹیکس اداکرنے کی جانب راغب کرنے ، محکمہ پولیس میں اصلاحات کے ذریعے اسے جدید خطوط پر استوار کر نے، بیرون ملک سرمایہ کاروں کو وطن عزیز میں سرمایہ کاری کے لیے سہولیات اور بہتر موقعے فراہم کرنے ایکسپورٹ انڈسٹری کو ترقی دینے ، پانی کی کمی دور کرنے کے لیے ڈیمز کی تعمیر ، صاف پانی کی فراہمی ، انصاف کا جدید نظام ، مقدمات کے جلد فیصلے ، عدالتی نظام کی بہتری ، بیوروکریسی اور سرکار ی ملازمین کو عام آدمی اور عوام کے تابع کرنے اور ان سے بہتر رویہ اختیار کرنے ، منی لانڈرنگ کا خاتمہ ، بیرون ملک سے لوٹی دولت کی واپسی اور کرپشن اور بدعنوانی کے خاتمے کے لیے اقدامات جب کہ ملک کو مدینہ کی طر ز پر فلاحی ریاست بنانے ، رحم کا رویہ اختیار کرنے ، مہاجر ین اور انصار کا طریقہ کار اپناتے ہوئے بے سہارا بچوں اور بیواﺅں کو سہارا دینے کے لیے اقدامات ، سادہ زندگی ، کفایت شعاری ، مثبت سوچ اور رہن سہن بدلنے کے لیے قوم سے عمران خان کی اپیل ان کی خدمت کی ویژن کی عکاس ہے۔ انہوںنے اپنی تقریر میں جس طرح عوام کے دکھوں کا احاطہ کیا ہے وہ قابل تحسین ہے ۔ ملکی تاریخ میں کسی منتخب حکمران کی طرف سے شاید ہی اس انداز میں گہرائی کے ساتھ عوامی مشکلات و مسائل کو محسوس کیا گیا ہو۔ یا ان کے حل کے لیے اقدامات کا ارادہ ظاہر کیا گیا ہو۔ عمران خان نے قوم کو یہ ویژن دیا ہے کہ اس ملک میں یا تو کرپشن چلے گی یا یہ ملک چلے گا۔ کرپشن اور بد عنوانی کے خلاف جہاد کی ضرورت ہے ملک کو مسائل کی دلدل سے نکالنے کے لیے عوام میرا ساتھ دیں۔ تاکہ میں اپنے عزم کو عملی جامہ پہنا کر ملک و قوم کو ترقی کی راہ پر گامزن کر سکوں۔ ان کی تقریر کا ایک ایک لفظ عوام کے جذبات کی ترجمانی تھی۔ بقول شاعر
آﺅ سنتے ہیں شہر کے نئے حاکم کا خطاب
بات کرتا ہے تو لگتا ہے کہ میں بولتاہوں
ڈاکٹر شجاع اختر اعوان
37101-1774390-5

Check Also

‫شہر وجود پاتا ہے جب ہوائی اڈہ ابھرتا ہے: گوانگچو میں ورلڈ روٹس 2018ء شروع گوانگچو، چین، 17 ستمبر 2018ء/سنہوا-ایشیانی

‫شہر وجود پاتا ہے جب ہوائی اڈہ ابھرتا ہے: گوانگچو میں ورلڈ روٹس 2018ء شروع ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *