Home / بزنس / پاکستان جلد اٹلی کے ٹاپ ٹین تجارتی حصے داروں میں شامل ہوجائےگا

پاکستان جلد اٹلی کے ٹاپ ٹین تجارتی حصے داروں میں شامل ہوجائےگا

 

 

 

پاکستان جلد اٹلی کے ٹاپ ٹین تجارتی حصے داروں میں شامل ہوجائےگا : سفیر
لاہور، ( ) اٹلی کے سفیر سٹیفانو پونٹ کروو نے لاہور چیمبر کے صدر ملک طاہر جاوید، سینئر نائب صدر خواجہ خاور رشید، نائب صدر ذیشان خلیل، ایگزیکٹو کمیٹی اراکین اور سابق عہدیداروں سے لاہور چیمبر میں ملاقات میں کہا ہے کہ پاکستان جلد ہی اٹلی کے پہلے دس بڑے تجارتی حصے داروں میں شامل ہوجائے گا۔ دونوں ممالک کے تاجروں کو باہمی تجارت نئی بلندیوں پر لے جانے کے لیے ملکر کام کرنا چاہیے۔ سٹینڈنگ کمیٹی برائے ماربل، پاک اٹلی ٹریڈ کے کنوینر چودھری خادم حسین، اویس سعید پراچہ، میاں محمد نوا: طاہر منظور چودھری، ادیب اقبال شیخ، تہمینہ سعید چودھری، شاہد نذیر، شاہ رخ جمال ، شیخ ظفر اقبال اور محمد چودھری بھی اس موقع پر موجود تھے۔ اٹلی کے سفیر نے کہا کہ توانائی، سٹیل، کیمیکلز، مائننگ اور دیگر بہت سے شعبوں سے تعلق رکھنے والی مزید اٹالین کمپنیاں پاکستان میں آپریشن شروع کرنے کی منصوبہ بندی کررہی ہیں، پاکستان کو ٹیکنالوجی کے شعبے میں اٹلی کے تجربے سے فائدہ اٹھانا چاہیے۔ اٹلی سو فیصد توانائی متبادل ذرائع سے پیدا کررہا ہے۔ انہوں نے دونوں ممالک کے درمیان تجارتی وفد کے تبادلے اور نمائشوں و میلوں میں حصہ لینے کی ضرورت پر بھی زور دیا۔ لاہور چیمبر کے صدر ملک طاہر جاوید نے کہا کہ اٹلی یورپ میں پاکستان کا اہم حصے داراور درآمدات و برآمدات کے حوالے سے چوتھے نمبر پر ہے، اطمینان بخش بات یہ ہے کہ تجارت کا حجم پاکستان کے حق میں ہے ۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان کی اٹلی کو بڑی برآمدات میں بیڈ لینن، وون فیبرک، لیدر آئٹمز، چاول،فٹ ویئر اور کپاس وغیرہ برآمدت جبکہ فارماسیوٹیکل، کیمیکلز، مشینری، اور پلاسٹک وغیرہ درآمد کررہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اٹلی کے سرمایہ کاروں اور تاجروں کی جانب سے پاکستان کے فیشن اور ماربل سیکٹرز میں دلچسپی لینا خوش آئند ہے، اگر اٹلی ٹیکنالوجی کے حصول میں پاکستان کی مدد کرے تو یہ شعبے تیزی سے ترقی کرسکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ تجارتی معلومات کا تبادلہ بھی تجارت کے فروغ میں اہم کردار ادا کرسکتا ہے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
حکومت پیپر کنورٹرز اور کوروگیٹڈ کارٹن مینوفیکچررز کے مسائل جلد حل کرے: ملک طاہر جاوید
لاہور ( ) لاہور چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر ملک طاہر جاوید نے حکومت پر زور دیا ہے کہ وہ پیپر کنورٹرز اور کوروگیٹڈ کارٹن مینوفیکچررز کے مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل کرے کیونکہ خام مال کی قیمتوں میں اضافے کی وجہ سے یہ شعبہ شدید مشکلات سے دوچار اور بقا کی جنگ لڑ رہا ہے۔ عدنان خالد بٹ کی سربراہی میں کوروگیٹڈ کارٹن مینوفیکچررز کے وفد سے ملاقات میں لاہور چیمبر کے صدر نے کہا کہ اس وقت انڈسٹری کو حکومت کی سپورٹ کی ضرورت ہے تاکہ یہ برآمدات کے فروغ اور تجارتی خسارہ میں کمی جیسے مسائل حل کرنے میں کردار ادا کرسکے۔ عدنان خالد بٹ نے لاہور چیمبر کے صدر ملک طاہر جاوید کو آگاہ کیا کہ خام مال کی قیمتوں میں 20فیصد سے زائد اضافے بجلی و گیس کے زیادہ ٹیرف نے پیپر کنورٹرز اور کوروگیٹڈ کارٹن مینوفیکچرنگ انڈسٹری کے لیے بقا کی جنگ لڑنا مشکل کردیا ہے، ویسٹ پیپر کی درآمدی قیمت بڑھنے سے امپورٹ بھی کم ہوگئی ہے ، اس تمام بحران کی وجہ سے ڈیمانڈ اور سپلائی میں بھی فرق آیا ہے جس کی وجہ سے بہت سی فیکٹریاں بند ہوگئی ہیں۔ ملک طاہر جاوید نے کہا کہ یہ صورتحال تشویشناک ہے، صنعتیں بند ہونے سے حکومت کے محاصل کم اور بے روزگاری بڑھے گی جو کسی طرح بھی ملک کے مفاد میں نہیں ہے۔ انہوں نے حکومت پر زور دیا کہ وہ فوری طور پر اس مسئلے کا نوٹس لیتے ہوئے پیپر کنورٹرز اور کوروگیٹڈ مینوفیکچررز کے مسائل فوری طور پر حل کرے

Check Also

آئی ایم ایف شرائط پر خدشات، روپیہ مزید 0.61 فیصد سستا

 کراچی:  آئی ایم ایف سے جاری مذاکرات میں مزید سخت اقدامات کے خدشات کے باعث ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *