Home / خبر یں / پاکستان مسلم لیگ شعبہ خواتین کے زیراہتمام مسلم لیگ ہاﺅس میں علامہ اقبال کے حوالے سے تقریب

پاکستان مسلم لیگ شعبہ خواتین کے زیراہتمام مسلم لیگ ہاﺅس میں علامہ اقبال کے حوالے سے تقریب

 

 

پاکستان مسلم لیگ شعبہ خواتین کے زیراہتمام مسلم لیگ ہاﺅس میں علامہ اقبال کے حوالے سے تقریب
فکراقبال کے بغیر ملک میں قومیت و لسانیت اور فرقہ واریت فروغ پا رہی ہے ،خدیجہ فاروقی
علامہ اقبال ؒ امت مسلمہ کی معاشی خود مختاری چاہتے تھے ،ماجدہ زیدی
قائد اعظم ؒ اور حکیم الامت جیسی ہستیوں کی سیاسی فکر کو بھولنا بڑی بدقسمتی ہے ،آمنہ الفت
لاہور ( ) علامہ محمد اقبال ؒ نے اپنی شاعری میں قبل از وقت ہی بتا دیا گیاکہ جو قومیں اپنے اسلاف ،روایات اور عظمت کو بھول جاتی ہیں وہ پستی کی طرف گرتی چلی جاتی ہیں۔ فکر اقبال کو عام نہ کرنے کی وجہ سے آج پاکستان میں قومیت و لسانیت کا تعصب اور فرقہ واریت فروغ پا رہی ہے اگر ہم علامہ اقبال کی تعلیمات پر عمل کرنا شروع کردیں تو قومی و ملی مسائل ختم ہو جائیں گے وطن عزیز ترقی کی راہ پر چل نکلے گا، آج بھی علامہ اقبالؒ کے افکار کو عملی جامعہ پہنایا جائے تو ہم بہترین قوم بن سکتے ہیں۔ان خیالات کا اظہار پاکستان مسلم لیگ کی رکن صوبائی اسمبلی خدیجہ عمر فاروقی صدر شعبہ خواتین پنجاب نے مسلم لیگ ہاﺅس میں علامہ اقبال ؒ کے حوالے سے منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے مسلم لیگ شعبہ خواتین پنجاب کی جنرل سیکرٹری ماجدہ زیدی نے کہا کہ علامہ محمد اقبالؒ امت مسلمہ کی جغرافیائی ،سیاسی ،سماجی آزادی کے ساتھ ساتھ معاشی خودمختاری بھی چاہتے تھے ، قائداعظم محمد علی جناحؒ اور حکیم الامت علامہ محمد اقبال ؒ جیسی ہستیوں کی فکر کو بھولنا سب سے بڑی بدقسمتی ہے۔انہوںنے کہا کہ اقبال نے پاکستان کو آزاد معیشت سیاسی اور مذہبی آزادی کا تصور دیا سوچنا ہو گا کہ ہم نے پاکستان کوکیا دیا ۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے صدر شعبہ وخواتین لاہور آمنہ الفت نے کہا کہ ہمیں فخر ہے کہ مفکر اسلام اورتصور پاکستان کے بانی علامہ ڈاکٹر محمد اقبال بین الاقوامی شاعر ہونے کے ساتھ ساتھ پاکستان اور ہندوستان کے مشترکہ قومی شاعر ہیں اہل ایران انہیں پیرومرشدکی طرح آج بھی یاد کرتی ہے انہوںنے کہا کہ قائداعظم اور علامہ اقبال جیسی ہستیوں کی سیاسی فکر کو بھولنا بڑی بدقسمتی ہے۔ علامہ اقبال 19 ویں صدی کے ولی اللہ ہے آپ نے خودی کی تربیت کے لیے شرف انسانیت کو اعلیٰ مدارج سے روشناس کریا ،انہوں نے کہا کہ آج بھی ہمیں اقبال جیسے مرد مومن کی ضرورت ہے جو کہ مسلمانوں کو ایک جگہ پر اکٹھا کرسکے اور اس پر نوجوانوں کا بھی یہ فرض بنتا ہے کہ وہ اقبال ؒ کے افکار کو پڑھیں اور اس پر عمل کرتے ہوئے پاکستان کی ترقی اور خوشحالی کے لیے کام کریں ۔تقریب سے سابق رکن صوبائی اسمبلی کنول نسیم ،بیگم حامد رانا ڈاکٹر نگہت آغا ، نگہت رانا ، پروین سکندر گل ،شبنم ظفر،رضیہ سلطانہ ، تبسم ناز ،ہادیہ ،سمعیہ طارق ،زیبا احسان ، صائمہ گل خان ، ارشاد چوہدری ،سمیرا چوہدری ،آمنہ چوہدری، سمیرا نواز و دیگر عہدیداروں نے بھی خطاب کیا۔

Check Also

مقبوضہ کشمیر میں شہید 11 نوجوانوں کی نماز جنازہ میں ہزاروں افراد کی شرکت

 سری نگر: مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج کے ہاتھوں 11 بے گناہ نوجوانوں کی شہادت کیخلاف ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *